اب کسی سے مرا حساب نہیں

جون ایلیا

اب کسی سے مرا حساب نہیں

جون ایلیا

MORE BY جون ایلیا

    اب کسی سے مرا حساب نہیں

    میری آنکھوں میں کوئی خواب نہیں

    خون کے گھونٹ پی رہا ہوں میں

    یہ مرا خون ہے شراب نہیں

    میں شرابی ہوں میری آس نہ چھین

    تو مری آس ہے سراب نہیں

    نوچ پھینکے لبوں سے میں نے سوال

    طاقت شوخئ جواب نہیں

    اب تو پنجاب بھی نہیں پنجاب

    اور خود جیسا اب دو آب نہیں

    غم ابد کا نہیں ہے آن کا ہے

    اور اس کا کوئی حساب نہیں

    بودش اک رو ہے ایک رو یعنی

    اس کی فطرت میں انقلاب نہیں

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    نازش

    نازش

    مآخذ:

    • Book : Gumaan (Poetry) (Pg. 73)
    • Author : Jaun Elia
    • مطبع : Takhleeqar Publishers (2012)
    • اشاعت : 2012

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY