اے درد عشق تجھ سے مکرنے لگا ہوں میں

جاں نثاراختر

اے درد عشق تجھ سے مکرنے لگا ہوں میں

جاں نثاراختر

MORE BY جاں نثاراختر

    اے درد عشق تجھ سے مکرنے لگا ہوں میں

    مجھ کو سنبھال حد سے گزرنے لگا ہوں میں

    پہلے حقیقتوں ہی سے مطلب تھا اور اب

    ایک آدھ بات فرض بھی کرنے لگا ہوں میں

    ہر آن ٹوٹتے یہ عقیدوں کے سلسلے

    لگتا ہے جیسے آج بکھرنے لگا ہوں میں

    اے چشم یار میرا سدھرنا محال تھا

    تیرا کمال ہے کہ سدھرنے لگا ہوں میں

    یہ مہر و ماہ ارض و سما مجھ میں کھو گئے

    اک کائنات بن کے ابھرنے لگا ہوں میں

    اتنوں کا پیار مجھ سے سنبھالا نہ جائے گا

    لوگو تمہارے پیار سے ڈرنے لگا ہوں میں

    دلی کہاں گئیں ترے کوچوں کی رونقیں

    گلیوں سے سر جھکا کے گزرنے لگا ہوں میں

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    نامعلوم

    نامعلوم

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    اے درد عشق تجھ سے مکرنے لگا ہوں میں نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY