ایسے چپ ہیں کہ یہ منزل بھی کڑی ہو جیسے

احمد فراز

ایسے چپ ہیں کہ یہ منزل بھی کڑی ہو جیسے

احمد فراز

MORE BYاحمد فراز

    ایسے چپ ہیں کہ یہ منزل بھی کڑی ہو جیسے

    تیرا ملنا بھی جدائی کی گھڑی ہو جیسے

    اپنے ہی سائے سے ہر گام لرز جاتا ہوں

    راستے میں کوئی دیوار کھڑی ہو جیسے

    کتنے ناداں ہیں ترے بھولنے والے کہ تجھے

    یاد کرنے کے لیے عمر پڑی ہو جیسے

    تیرے ماتھے کی شکن پہلے بھی دیکھی تھی مگر

    یہ گرہ اب کے مرے دل میں پڑی ہو جیسے

    منزلیں دور بھی ہیں منزلیں نزدیک بھی ہیں

    اپنے ہی پاؤں میں زنجیر پڑی ہو جیسے

    آج دل کھول کے روئے ہیں تو یوں خوش ہیں فرازؔ

    چند لمحوں کی یہ راحت بھی بڑی ہو جیسے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    رنا لیلیٰ

    رنا لیلیٰ

    غلام علی

    غلام علی

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق,

    نعمان شوق

    ایسے چپ ہیں کہ یہ منزل بھی کڑی ہو جیسے نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY
    بولیے