بات جو تجھ سے زبانی ہو گئی

عادل حیات

بات جو تجھ سے زبانی ہو گئی

عادل حیات

MORE BY عادل حیات

    بات جو تجھ سے زبانی ہو گئی

    کچھ حقیقت کچھ کہانی ہو گئی

    بے سبب پھرتی نہیں ہے راہ میں

    شہر کی لڑکی سیانی ہو گئی

    رات پھر پاگل ہوا کے شور میں

    زیست میری داستانی ہو گئی

    روز کہتے ہیں مگر کہتے نہیں

    زندگی اپنی کہانی ہو گئی

    بات اپنے شہر کی کچھ تو کہو

    قاتلوں کی پاسبانی ہو گئی

    کس لیے بے کیف ہو عادلؔ حیات

    ختم کیا ساری کہانی ہو گئی

    مآخذ:

    • کتاب : Sitara Sang (Gazals) (Pg. 79)
    • Author : Adil Hayat
    • مطبع : Nirali Duniya Publications,Darya Ganj, Delhi (2004)
    • اشاعت : 2004

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY