بچپن کا دور عہد جوانی میں کھو گیا

عباس تابش

بچپن کا دور عہد جوانی میں کھو گیا

عباس تابش

MORE BYعباس تابش

    بچپن کا دور عہد جوانی میں کھو گیا

    یہ امر واقعہ بھی کہانی میں کھو گیا

    لہروں میں کوئی نقشہ کہاں پائیدار ہے

    سورج کے بعد چاند بھی پانی میں کھو گیا

    آنکھوں تک آ سکی نہ کبھی آنسوؤں کی لہر

    یہ قافلہ بھی نقل مکانی میں کھو گیا

    اب بستیاں ہیں کس کے تعاقب میں رات دن

    دریا تو آپ اپنی روانی میں کھو گیا

    تابشؔ کا کیا کہیں کہ وہ زہرہ گداز شخص

    آتش فشاں کا پھول تھا پانی میں کھو گیا

    مأخذ :
    • کتاب : Ishq Abaab (Pg. 184)
    • Author : Abbas Tabish
    • اشاعت : 2011

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے