بڑے حساب سے عزت بچانی پڑتی ہے

حسیب سوز

بڑے حساب سے عزت بچانی پڑتی ہے

حسیب سوز

MORE BYحسیب سوز

    بڑے حساب سے عزت بچانی پڑتی ہے

    ہمیشہ جھوٹی کہانی سنانی پڑتی ہے

    تم ایک بار جو ٹوٹے تو جڑ نہیں پائے

    ہمیں تو روز یہ ذلت اٹھانی پڑتی ہے

    مجھے خریدنے ایسے بھی لوگ آتے ہیں

    کہ جن کے کہنے سے قیمت گھٹانی پڑتی ہے

    ملال یہ ہے کہ یہ دونوں ہاتھ میرے ہیں

    کسی کی چیز کسی سے چھپانی پڑتی ہے

    تم اپنا نام بتا کر ہی چھوٹ جاتے ہو

    ہمیں تو ذات بھی اپنی بتانی پڑتی ہے

    مآخذ :
    • کتاب : Dhoop Phir Nikal aai (Pg. 15)
    • Author : Haseeb soz
    • مطبع : Lamhe lamhe Publications, Imam bara Alapur, (2017)
    • اشاعت : 2017

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY