بغیر تولے پروں کو اڑان مت لینا

اسرارالحق اسرار

بغیر تولے پروں کو اڑان مت لینا

اسرارالحق اسرار

MORE BYاسرارالحق اسرار

    بغیر تولے پروں کو اڑان مت لینا

    زمین والو کبھی آسمان مت لینا

    یہ بام و در بھی اگر جسم کے پگھل جائیں

    کسی سے بھیک میں تم سائبان مت لینا

    بہت عظیم ہنر ہے یہ خاکساری بھی

    تم اپنے سر پہ مگر خاکدان مت لینا

    بس اب تو پونچھ لو گرد ملال چہرے سے

    کسی کے ضبط کا پھر امتحان مت لینا

    جہاں پہ لوگ بہت با شعور ہوتے ہیں

    خلوص دل کا وہاں امتحان مت لینا

    نباہ آپ اگر چاہتے ہیں دنیا سے

    کہیں بھی شرط کوئی درمیان مت لینا

    جو کہہ سکو تو کہو ورنہ چپ رہو اسرارؔ

    کہیں سے قرض میں لفظ بیان مت لینا

    مآخذ :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY