aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

بہے ساتھ اشک کے لخت جگر تک

امداد امام اثر

بہے ساتھ اشک کے لخت جگر تک

امداد امام اثر

MORE BYامداد امام اثر

    بہے ساتھ اشک کے لخت جگر تک

    نہ کی اس نے مری جانب نظر تک

    عبث صیاد کو ہے بد گمانی

    نہیں بازو میں اپنے ایک پر تک

    خبر آئی مریض درد و غم کی

    کہیں پہنچے خبر اس بے خبر تک

    نزاکت سے لگی بل کرنے کیا کیا

    ابھی گیسو نہ پہنچے تھے کمر تک

    جئے جاتے ہیں شکل شمع سوزاں

    نہ کچھ باقی رہیں گے ہم سحر تک

    اگر میں یاد ہوتا تو نہ آتے

    مگر بھولے سے آئے میرے گھر تک

    دم گریہ تھی غالب ناتوانی

    پہنچتے لخت دل کیا چشم تر تک

    خدا جانے اثرؔ کو کیا ہوا ہے

    رہا کرتا ہے چپ دو دو پہر تک

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے