بخشے پھر اس نگاہ نے ارماں نئے نئے

ادیب سہارنپوری

بخشے پھر اس نگاہ نے ارماں نئے نئے

ادیب سہارنپوری

MORE BYادیب سہارنپوری

    بخشے پھر اس نگاہ نے ارماں نئے نئے

    محسوس ہو رہے ہیں دل و جاں نئے نئے

    یوں قید زندگی نے رکھا مضطرب ہمیں

    جیسے ہوئے ہوں داخل زنداں نئے نئے

    کس کس سے اس امانت دیں کو بچایئے

    ملتے ہیں روز دشمن ایماں نئے نئے

    راحت کی جستجو میں خوشی کی تلاش میں

    غم پالتی ہے عمر گریزاں نئے نئے

    مسجد میں اور ذکر بتوں کا جناب شیخ

    شاید ہوئے ہیں آپ مسلماں نئے نئے

    دم بھر دم اجل کو نہ حاصل ہوا فراغ

    ہوتے رہے چراغ فروزاں نئے نئے

    خانہ خراب ہم سے جہاں میں کہاں ادیبؔ

    آباد کر رہے ہیں بیاباں نئے نئے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    ادیب سہارنپوری

    ادیب سہارنپوری

    RECITATIONS

    ادیب سہارنپوری

    ادیب سہارنپوری

    ادیب سہارنپوری

    بخشے پھر اس نگاہ نے ارماں نئے نئے ادیب سہارنپوری

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY