بیان شوق پہ مائل وہ کم نظر ہوں گے

مخمور سعیدی

بیان شوق پہ مائل وہ کم نظر ہوں گے

مخمور سعیدی

MORE BYمخمور سعیدی

    بیان شوق پہ مائل وہ کم نظر ہوں گے

    جو ضبط شوق کی لذت سے بے خبر ہوں گے

    لذیذ ہو تو حکایت دراز ہوتی ہے

    ہم اہل غم کے فسانے تو مختصر ہوں گے

    ملے گی عشق کی ان میں بھی کار فرمائی

    وہ حادثے جو کسی اور نام پر ہوں گے

    کھلا نہ تھا یہ کبھی راز ان کی قربت میں

    کہ دور ہو کے وہ مجھ سے قریب تر ہوں گے

    تو آفتاب حقیقت کہیں طلوع تو ہو

    نہ ہو سکیں ترے ہم روبرو مگر ہوں گے

    جو گائے ہیں وہی نغمے بھی خیر میرے ہیں

    مگر جو گا نہ سکا وہ حسین تر ہوں گے

    اب ان کا ذکر مری گفتگو میں ہے مخمورؔ

    اب اعتراض مری بات بات پر ہوں گے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY