بھلا بھی دے اسے جو بات ہو گئی پیارے

حبیب جالب

بھلا بھی دے اسے جو بات ہو گئی پیارے

حبیب جالب

MORE BYحبیب جالب

    بھلا بھی دے اسے جو بات ہو گئی پیارے

    نئے چراغ جلا رات ہو گئی پیارے

    تری نگاہ پشیماں کو کیسے دیکھوں گا

    کبھی جو تجھ سے ملاقات ہو گئی پیارے

    نہ تیری یاد نہ دنیا کا غم نہ اپنا خیال

    عجیب صورت حالات ہو گئی پیارے

    اداس اداس ہیں شمعیں بجھے بجھے ساغر

    یہ کیسی شام خرابات ہو گئی پیارے

    وفا کا نام نہ لے گا کوئی زمانے میں

    ہم اہل دل کو اگر مات ہو گئی پیارے

    تمہیں تو ناز بہت دوستوں پہ تھا جالبؔ

    الگ تھلگ سے ہو کیا بات ہو گئی پیارے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    ملکہ پکھراج

    ملکہ پکھراج

    مآخذ :
    • کتاب : kulliyat-e-habib jaalib (Pg. 96)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY