بکھری ہوئی ہے یوں مری وحشت کی داستاں

مبارک عظیم آبادی

بکھری ہوئی ہے یوں مری وحشت کی داستاں

مبارک عظیم آبادی

MORE BYمبارک عظیم آبادی

    بکھری ہوئی ہے یوں مری وحشت کی داستاں

    دامن کدھر کدھر ہے گریباں کہاں کہاں

    نکلے اس انجمن سے تو پہلو میں دل نہ تھا

    آئے جو ڈھونڈنے تو وہ بولے یہاں کہاں

    ایسے میں کیا چلے ہو مبارکؔ چمن کو تم

    بلبل کہاں بہار کہاں باغباں کہاں

    مآخذ:

    • کتاب : intekhaab-e-kalaam (Pg. 18)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY