چارہ ساز زخم دل وقت رفو رونے لگا

منشی امیر اللہ تسلیم

چارہ ساز زخم دل وقت رفو رونے لگا

منشی امیر اللہ تسلیم

MORE BYمنشی امیر اللہ تسلیم

    چارہ ساز زخم دل وقت رفو رونے لگا

    جی بھر آیا دیدۂ سوزن لہو رونے لگا

    بس کہ تھی رونے کی عادت وصل میں بھی یار سے

    کہہ کے اپنا آپ حال آرزو رونے لگا

    خندۂ زخم جگر نے دل دکھایا اور بھی

    جس گھڑی ٹوٹا کوئی تار رفو رونے لگا

    صدمۂ بے رحمی ساقی نہ اٹھا بزم میں

    جی بھر آیا دیکھ کر خالی سبو رونے لگا

    تھا عدم میں کھینچ لایا آب و دانہ جب یہاں

    دیکھ کر بیچارگی سے چار سو رونے لگا

    آ گیا کعبہ میں جب محراب ابرو کا خیال

    بیٹھ کر تسلیمؔ خستہ قبلہ رو رونے لگا

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق,

    نعمان شوق

    چارہ ساز زخم دل وقت رفو رونے لگا نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے