چراغ ہوں کب سے جل رہا ہوں مجھے دعاؤں میں یاد رکھیے

پیرزادہ قاسم

چراغ ہوں کب سے جل رہا ہوں مجھے دعاؤں میں یاد رکھیے

پیرزادہ قاسم

MORE BYپیرزادہ قاسم

    چراغ ہوں کب سے جل رہا ہوں مجھے دعاؤں میں یاد رکھیے

    جو بجھ گیا تو سحر نما ہوں مجھے دعاؤں میں یاد رکھیے

    وہ بات جو آپ کہہ نہ پائے مری غزل میں بیاں ہوئی ہے

    میں آپ کا حرف مدعا ہوں مجھے دعاؤں میں یاد رکھیے

    غبار ہوں آپ چاہے غازہ بنائیں یا زیر پا بچھا لیں

    میں کب سے رقصاں ہوں تھک چکا ہوں مجھے دعاؤں میں یاد رکھیے

    بہت ہی شائستگی سے ہر لمحہ ڈوبتی اک صدا کی صورت

    میں خلوت جاں میں بجھ رہا ہوں مجھے دعاؤں میں یاد رکھیے

    بلا سے یہ راہ شوق میری نہ ہو سکی پر تمہاری خاطر

    مثال نقش قدم بچھا ہوں مجھے دعاؤں میں یاد رکھیے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    پیرزادہ قاسم

    پیرزادہ قاسم

    RECITATIONS

    پیرزادہ قاسم

    پیرزادہ قاسم

    پیرزادہ قاسم

    چراغ ہوں کب سے جل رہا ہوں مجھے دعاؤں میں یاد رکھیے پیرزادہ قاسم

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY