چھیڑا ذرا صبا نے تو گلنار ہو گئے

بشر نواز

چھیڑا ذرا صبا نے تو گلنار ہو گئے

بشر نواز

MORE BYبشر نواز

    چھیڑا ذرا صبا نے تو گلنار ہو گئے

    غنچے بھی مہ جمالوں کے رخسار ہو گئے

    وہ لوگ جن کی دشت نوردی کی دھوم تھی

    مدت ہوئی کہ سنگ در یار ہو گئے

    صدیوں کا غم سمٹ کے دلوں میں اتر گیا

    ہم لوگ زندگی کے گنہ گار ہو گئے

    زلفوں کی طرح پہلے بھی بادل حسین تھے

    ڈولی پون تو اور طرحدار ہو گئے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY