چپ رہے دیکھ کے ان آنکھوں کے تیور عاشق

فضیل جعفری

چپ رہے دیکھ کے ان آنکھوں کے تیور عاشق

فضیل جعفری

MORE BYفضیل جعفری

    چپ رہے دیکھ کے ان آنکھوں کے تیور عاشق

    ورنہ کیا کچھ نہ اٹھا سکتے تھے محشر عاشق

    دیکھیں اب کون سے رستے پہ زمانہ جائے

    کوچہ کوچہ ہیں پری زاد تو گھر گھر عاشق

    دم بخود زہرہ جبینوں کو تکا کرتا ہے

    ہے ہماری ہی طرح راہ کا پتھر عاشق

    وہ بھی انسان ہے کس کس کو نوازے گا فضیلؔ

    پھول سی جان کے پیچھے ہیں بہتر عاشق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY