دن میں جو ساتھ سب کے ہنستا تھا

اندر سرازی

دن میں جو ساتھ سب کے ہنستا تھا

اندر سرازی

MORE BYاندر سرازی

    دن میں جو ساتھ سب کے ہنستا تھا

    رات بھر وہ اکیلے روتا تھا

    بس وہی میری آخری شب تھی

    چاند جس رات مجھ سے روٹھا تھا

    آخری عمر تک رہے گی یاد

    ساتھ جس کے میں رات بھیگا تھا

    اور تو کوئی تھا نہیں شاید

    رات کو اٹھ کے میں ہی چیخا تھا

    جو حقیقت کھلی تو یہ جانا

    وہ محبت نہیں تماشا تھا

    میں بڑا سنگ دل تھا یارو جب

    دل بنانے کا میرا پیشہ تھا

    اور تو سارے خوش تھے بس اندرؔ

    ایک بلبل اداس بیٹھا تھا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY