دولہن بھی اگر بن کے آئے گی رات

سخی لکھنوی

دولہن بھی اگر بن کے آئے گی رات

سخی لکھنوی

MORE BYسخی لکھنوی

    دولہن بھی اگر بن کے آئے گی رات

    ہمیں بے تمہارے نہ بھائے گی رات

    ہمیں ہجر میں خوں رلائے گی رات

    ہمارے لہو میں نہائے گی رات

    بہت خواب غفلت میں دن چڑھ گیا

    اٹھو سونے والو پھر آئے گی رات

    ہم اس سے زیادہ سیہ بخت ہیں

    ہمیں تیرگی کیا دکھائے گی رات

    نہ ٹالے ٹلے گا یہ روز فراق

    قسم آج آنے کے کھائے گی رات

    سخیؔ اڑ کے بیٹھی ہے گھر پر مرے

    بس اب جان ہی لے کے جائے گی رات

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY
    بولیے