ڈوبتا صاف نظر آیا کنارہ کوئی دوست

وصی شاہ

ڈوبتا صاف نظر آیا کنارہ کوئی دوست

وصی شاہ

MORE BYوصی شاہ

    ڈوبتا صاف نظر آیا کنارہ کوئی دوست

    پھر بھی کشتی سے نہیں ہم نے اتارا کوئی دوست

    جب بھی نیکی کا کوئی کام کیا ہے ہم نے

    دے دیا رب نے ہمیں آپ سے پیارا کوئی دوست

    جیت پر خوش ہو تجھے اس سے غرض کیا مرے یار

    تیری خوشیوں کے لئے جان سے ہارا کوئی دوست

    کیسے جی پائیں گے اس شہر پریشاں میں جہاں

    کوئی دشمن ہے ہمارا نہ ہمارا کوئی دوست

    کچھ تو جینے کے لئے ہم کو بھی دے رب کریم

    ساغر و مینا کسی غم کا سہارا کوئی دوست

    روٹھ جائے مری آنکھوں سے بھلے بینائی

    کاش روٹھے نہ وصیؔ آنکھ کا تارا کوئی دوست

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے