دور ہیں وہ اور کتنی دور

شکیل بدایونی

دور ہیں وہ اور کتنی دور

شکیل بدایونی

MORE BYشکیل بدایونی

    دور ہیں وہ اور کتنی دور

    پھر بھی مری نظروں کے حضور

    رنج و مصیبت جور و ستم

    آپ کی خاطر سب منظور

    دل پر بیتے لب پہ نہ آئے

    ہائے محبت کا دستور

    حسرت دید از دید بلند

    حور سے بہتر وعدۂ حور

    پردۂ رنگ و بو تو اٹھاؤ

    ہوگا کوئی نہ کوئی ضرور

    دور ترقی کیا ہے شکیلؔ

    دنیا کی عقلوں کا فتور

    مأخذ :
    • کتاب : Kulliyat-e-Shakiil Badaayuuni (Pg. 248)
    • Author : Shakiil Badaayuuni
    • مطبع : Farid Book Depot (Pvt.) Ltd

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY