گالی سہی ادا سہی چین جبیں سہی

انشا اللہ خاں انشا

گالی سہی ادا سہی چین جبیں سہی

انشا اللہ خاں انشا

MORE BYانشا اللہ خاں انشا

    گالی سہی ادا سہی چین جبیں سہی

    یہ سب سہی پر ایک نہیں کی نہیں سہی

    مرنا مرا جو چاہے تو لگ جا گلے سے ٹک

    اٹکا ہے دم مرا یہ دم واپسیں سہی

    گر نازنیں کے کہنے سے مانا برا ہو کچھ

    میری طرف کو دیکھیے میں نازنیں سہی

    کچھ پڑ گیا ہے آنکھ میں رونا کہے ہے تو

    کیوں میں عبث کو بحثوں یہی دل نشیں سہی

    آگے بڑھے جو جاتے ہو کیوں کون ہے یہاں

    جو بات ہم کو کہنی ہے تم سے یہیں سہی

    منظور دوستی جو تمہیں ہے ہر ایک سے

    اچھا تو کیا مضایقہ انشاؔ سے کیں سہی

    RECITATIONS

    فصیح اکمل

    فصیح اکمل

    فصیح اکمل

    گالی سہی ادا سہی چین جبیں سہی فصیح اکمل

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY