غم محبت میں دل کے داغوں سے روکش لالہ زار ہوں میں

تاجور نجیب آبادی

غم محبت میں دل کے داغوں سے روکش لالہ زار ہوں میں

تاجور نجیب آبادی

MORE BYتاجور نجیب آبادی

    غم محبت میں دل کے داغوں سے روکش لالہ زار ہوں میں

    فضا بہاریں ہے جس کے جلووں سے وہ حریف بہار ہوں میں

    کھٹک رہا ہوں ہر اک کی نظروں میں بچ کے چلتی ہے مجھ سے دنیا

    زہے گراں باریٔ محبت کہ دوش ہستی پہ بار ہوں میں

    کہاں ہے تو وعدۂ وفا کر کے او مرے بھول جانے والے

    مجھے بچا لے کہ پائمال قیامت انتظار ہوں میں

    تری محبت میں میرے چہرے سے ہے نمایاں جلال تیرا

    ہوں تیرے جلووں میں محو ایسا کہ تیرا آئینہ دار ہوں میں

    وہ حسن بے التفات اے تاجورؔ ہوا التفات فرما

    تو زندگی اب سنا رہی ہے کہ عمر بے اعتبار ہوں میں

    مآخذ:

    • کتاب : Karwaan-e-Ghazal (Pg. 49)
    • Author : Farooq Argali
    • مطبع : Farid Book Depot (Pvt.) Ltd (2004)
    • اشاعت : 2004

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY