گھر لوٹ کے روئیں گے ماں باپ اکیلے میں

قیصر الجعفری

گھر لوٹ کے روئیں گے ماں باپ اکیلے میں

قیصر الجعفری

MORE BY قیصر الجعفری

    گھر لوٹ کے روئیں گے ماں باپ اکیلے میں

    مٹی کے کھلونے بھی سستے نہ تھے میلے میں

    کانٹوں پہ چلے لیکن ہونے نہ دیا ظاہر

    تلووں کا لہو دھویا چھپ چھپ کے اکیلے میں

    اے داور محشر لے دیکھ آئے تری دنیا

    ہم خود کو بھی کھو بیٹھے وہ بھیڑ تھی میلے میں

    خوشبو کی تجارت نے دیوار کھڑی کر دی

    آنگن کی چنبیلی میں بازار کے بیلے میں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY