ہم نہ نکہت ہیں نہ گل ہیں جو مہکتے جاویں

میر حسن

ہم نہ نکہت ہیں نہ گل ہیں جو مہکتے جاویں

میر حسن

MORE BYمیر حسن

    ہم نہ نکہت ہیں نہ گل ہیں جو مہکتے جاویں

    آگ کی طرح جدھر جاویں دہکتے جاویں

    اے خوشا مست کہ تابوت کے آگے جس کے

    آب پاشی کے بدل مے کو چھڑکتے جاویں

    جو کوئی آوے ہے نزدیک ہی بیٹھے ہے ترے

    ہم کہاں تک ترے پہلو سے سرکتے جاویں

    غیر کو راہ ہو گھر میں ترے سبحان اللہ

    اور ہم دور سے در کو ترے تکتے جاویں

    وقت اب وہ ہے کہ اک ایک حسنؔ ہو کے بتنگ

    صبر و تاب و خرد و ہوش کھسکتے جاویں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY