ہم تم میں کل دوری بھی ہو سکتی ہے

بیدل حیدری

ہم تم میں کل دوری بھی ہو سکتی ہے

بیدل حیدری

MORE BYبیدل حیدری

    ہم تم میں کل دوری بھی ہو سکتی ہے

    وجہ کوئی مجبوری بھی ہو سکتی ہے

    پیار کی خاطر کچھ بھی ہم کر سکتے ہیں

    وہ تیری مزدوری بھی ہو سکتی ہے

    سکھ کا دن کچھ پہلے بھی چڑھ سکتا ہے

    دکھ کی رات عبوری بھی ہو سکتی ہے

    دشمن مجھ پر غالب بھی آ سکتا ہے

    ہار مری مجبوری بھی ہو سکتی ہے

    بیدلؔ مجھ میں یہ جو اک کمی سی ہے

    وہ چاہے تو پوری بھی ہو سکتی ہے

    مآخذ :
    • کتاب : Pakistani Adab (Pg. 378)
    • Author : Dr. Rashid Amjad
    • مطبع : Pakistan Academy of Letters, Islambad, Pakistan (2009)
    • اشاعت : 2009

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY