ہمیں تقسیم کرنے کا ہنر ان پر نرالا ہے

پرمود شرما اثر

ہمیں تقسیم کرنے کا ہنر ان پر نرالا ہے

پرمود شرما اثر

MORE BY پرمود شرما اثر

    ہمیں تقسیم کرنے کا ہنر ان پر نرالا ہے

    مگر ان کو ہرانے کا ارادہ ہم نے پالا ہے

    زمانے بھر کے رنج و غم کبھی مجھ کو دئے اس نے

    کبھی جب لڑکھڑایا تو مجھے بڑھ کر سنبھالا ہے

    مکھوٹے وہ سدا جھوٹے لگا کر ہم سے ہے ملتا

    بہت شاطر پڑوسی ہے جنم سے دیکھا بھالا ہے

    کیا جو بزم میں ذکر وفا ان کی تو وہ بولے

    نہیں جو مدعا اس بات کو پھر کیوں اچھالا ہے

    کسی سے قرض لے کر شہر کو پھر جائے گا ہریاؔ

    عدالت نے جو اس کا فیصلہ ہی کل پہ ٹالا ہے

    بکے ہیں لوگ دینے کو گواہی جھوٹ کے حق میں

    مگر سچ جانتے ہیں جو انہیں کے منہ پہ تالا ہے

    برائی ختم کرنے کو بروں کا ہاتھ بھی تھاما

    اثرؔ کانٹے سے ہم نے پاؤں کا کانٹا نکالا ہے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    پرمود شرما اثر

    پرمود شرما اثر

    RECITATIONS

    پرمود شرما اثر

    پرمود شرما اثر

    پرمود شرما اثر

    ہمیں تقسیم کرنے کا ہنر ان پر نرالا ہے پرمود شرما اثر

    مآخذ:

    • کتاب : Rang Sapno ke (Pg. 109)
    • Author : Pramod Sharma 'Asar'
    • مطبع : Amrit Parkashan (2016)
    • اشاعت : 2016

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY