ہر کمند ہوس سے باہر ہے

خالد محمود

ہر کمند ہوس سے باہر ہے

خالد محمود

MORE BY خالد محمود

    ہر کمند ہوس سے باہر ہے

    طائر جاں قفس سے باہر ہے

    موت کا ایک دن معین ہے

    زندگی دسترس سے باہر ہے

    قافلے میں ہم اس مقام پہ ہیں

    جو صدائے جرس سے باہر ہے

    کوئی شے گھر کی خوش نہیں آتی

    وہ برس دو برس سے باہر ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY