ہر سمت لہو رنگ گھٹا چھائی سی کیوں ہے

فضیل جعفری

ہر سمت لہو رنگ گھٹا چھائی سی کیوں ہے

فضیل جعفری

MORE BYفضیل جعفری

    ہر سمت لہو رنگ گھٹا چھائی سی کیوں ہے

    دنیا مری آنکھوں میں سمٹ آئی سی کیوں ہے

    کیا مثل چراغ شب آخر ہے جوانی

    شریانوں میں اک تازہ توانائی سی کیوں ہے

    در آئی ہے کیوں کمرے میں دریاؤں کی خوشبو

    ٹوٹی ہوئی دیواروں پہ للچائی سی کیوں ہے

    میں اور مری ذات اگر ایک ہی شے ہیں

    پھر برسوں سے دونوں میں صف آرائی سی کیوں ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY