ہوا سرکش اندھیرا سخت جاں ہے

شہناز نبی

ہوا سرکش اندھیرا سخت جاں ہے

شہناز نبی

MORE BY شہناز نبی

    ہوا سرکش اندھیرا سخت جاں ہے

    چراغوں کو مگر کیا کیا گماں ہے

    یقیں تو جوڑ دیتا ہے دلوں کو

    کوئی شے اور اپنے درمیاں ہے

    ابھی سے کیوں لہو رونے لگی آنکھ

    پس منظر بھی کوئی امتحاں ہے

    وہی بے فیض راتوں کا تسلسل

    وہی میں اور وہی خواب گراں ہے

    مرے اندر ہے ان پیاسا کنارہ

    مرے اطراف اک دریا رواں ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY