حسن کو بے نقاب ہونے دو

نظر برنی

حسن کو بے نقاب ہونے دو

نظر برنی

MORE BYنظر برنی

    حسن کو بے نقاب ہونے دو

    عشق کو کامیاب ہونے دو

    زیست غرق شراب ہونے دو

    ہر حقیقت کو خواب ہونے دو

    طور‌ و موسیٰ سے ماورا ہیں ہم

    راز کا سد باب ہونے دو

    دیکھنا ہے ابھی حیات کو جشن

    اک نیا انقلاب ہونے دو

    میں بلا نوش و بادہ خوار سہی

    میری ہستی خراب ہونے دو

    آج کی شب تو ان کی محفل میں

    عشق کو باریاب ہونے دو

    ملتفت کوئی ہو رہا ہے نظرؔ

    لطف اور بے حساب ہونے دو

    مآخذ :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY