حسن مرہون جوش بادۂ ناز

فیض احمد فیض

حسن مرہون جوش بادۂ ناز

فیض احمد فیض

MORE BYفیض احمد فیض

    حسن مرہون جوش بادۂ ناز

    عشق منت کش فسون نیاز

    دل کا ہر تار لرزش پیہم

    جاں کا ہر رشتہ وقف سوز و گداز

    سوزش درد دل کسے معلوم

    کون جانے کسی کے عشق کا راز

    میری خاموشیوں میں لرزاں ہے

    میرے نالوں کی گم شدہ آواز

    ہو چکا عشق اب ہوس ہی سہی

    کیا کریں فرض ہے ادائے نماز

    تو ہے اور اک تغافل پیہم

    میں ہوں اور انتظار بے انداز

    خوف ناکامئ امید ہے فیضؔ

    ورنہ دل توڑ دے طلسم مجاز

    مآخذ :
    • کتاب : Nuskha Hai Wafa (Kulliyat-e-Faiz) (Pg. 19)
    • Author : Faiz Ahmad Faiz
    • مطبع : Educational Publishing House (2009)
    • اشاعت : 2009

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY