اس سفر میں نیند ایسی کھو گئی

راہی معصوم رضا

اس سفر میں نیند ایسی کھو گئی

راہی معصوم رضا

MORE BYراہی معصوم رضا

    اس سفر میں نیند ایسی کھو گئی

    ہم نہ سوئے رات تھک کر سو گئی

    دامن موج صبا خالی ہوا

    بوئے گل دشت وفا میں کھو گئی

    ہائے اس پرچھائیوں کے شہر میں

    دل سی اک زندہ حقیقت کھو گئی

    ہم نے جب ہنس کر کہا ممنون ہیں

    زندگی جیسے پشیماں ہو گئی

    مآخذ :
    • کتاب : ajnabi-shahr-ajnabi-raaste(rekhta website) (Pg. 227)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY