عشق کیا شے ہے دوست کیا کہئے

تنویر گوہر

عشق کیا شے ہے دوست کیا کہئے

تنویر گوہر

MORE BYتنویر گوہر

    عشق کیا شے ہے دوست کیا کہئے

    خوبصورت سی اک خطا کہئے

    سب کے اپنے معاملے ہیں جناب

    کس کو اچھا کسے برا کہئے

    نور اس کا ظہور اس کا ہے

    دیکھیے اور مرحبا کہئے

    ساری دنیا لگا چکی تہمت

    آپ بھی مجھ کو بے وفا کہئے

    ہر مرض کا علاج ممکن ہے

    درد دل کی ہے کیا دوا کہئے

    نام جب لکھ دی زندگی میرے

    کس لئے پھر ہے فاصلا کہئے

    جس نے لوٹا ہے چین گوہرؔ کا

    نام کیا لوں بس آشنا کہئے

    مأخذ :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY