عشق پر زور چل نہیں سکتا

بسمل سعیدی

عشق پر زور چل نہیں سکتا

بسمل سعیدی

MORE BY بسمل سعیدی

    عشق پر زور چل نہیں سکتا

    دل سنبھالے سنبھل نہیں سکتا

    آ کے دنیا میں انقلاب کوئی

    دل کی دنیا بدل نہیں سکتا

    ان کی نظریں بدل گئیں ورنہ

    یوں زمانہ بدل نہیں سکتا

    رنگ ہستی ہے انقلاب اگر

    رنگ ہستی بدل نہیں سکتا

    آ گیا ہوں وہاں سے گھبرا کر

    اب کہیں دل بہل نہیں سکتا

    عشق کی آگ میں جو جلتا ہے

    وہ جہنم میں جل نہیں سکتا

    وہ نگاہیں بدل گئیں بسملؔ

    اب زمانہ بدل نہیں سکتا

    مآخذ:

    • کتاب : Kulliyat-e-bismil Saeedi (Pg. 140)
    • Author : Bismil Saeedi
    • مطبع : Sahitya Akademi (2007)
    • اشاعت : 2007

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY