جب بھی نظم میکدہ بدلا گیا

فنا نظامی کانپوری

جب بھی نظم میکدہ بدلا گیا

فنا نظامی کانپوری

MORE BY فنا نظامی کانپوری

    جب بھی نظم میکدہ بدلا گیا

    اک نہ اک جام حسیں توڑا گیا

    جب سفینہ موج سے ٹکرا گیا

    ناخدا کو بھی خدا یاد آ گیا

    میں نے چھیڑا قصۂ جور فلک

    جانے کیوں ان کو پسینہ آ گیا

    دیکھ کر ان کی جفاؤں کا خلوص

    میں وفا کے نام پر شرما گیا

    آپ اب آئے آنسو پونچھنے

    جب مرے دامن پہ دھبہ آ گیا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY