aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

جیسے ہوتی آئی ہے ویسے بسر ہو جائے گی

میراجی

جیسے ہوتی آئی ہے ویسے بسر ہو جائے گی

میراجی

MORE BYمیراجی

    جیسے ہوتی آئی ہے ویسے بسر ہو جائے گی

    زندگی اب مختصر سے مختصر ہو جائے گی

    گیسوئے عکس شب فرقت پریشاں اب بھی ہے

    ہم بھی تو دیکھیں کہ یوں کیوں کر سحر ہو جائے گی

    انتظار منزل موہوم کا حاصل یہ ہے

    ایک دن ہم پر عنایت کی نظر ہو جائے گی

    سوچتا رہتا ہے دل یہ ساحل امید پر

    جستجو آئینۂ مد و جزر ہو جائے گی

    درد کے مشتاق گستاخی تو ہے لیکن معاف

    اب دعا اندیشہ یہ ہے کارگر ہو جائے گی

    سانس کے آغوش میں ہر سانس کا نغمہ یہ ہے

    ایک دن امید ہے ان کو خبر ہو جائے گی

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے