جنگلوں میں کہیں کھو جانا ہے

خلیل مامون

جنگلوں میں کہیں کھو جانا ہے

خلیل مامون

MORE BYخلیل مامون

    جنگلوں میں کہیں کھو جانا ہے

    جانور پھر مجھے ہو جانا ہے

    راستے میں کہیں سایہ جو ملے

    عمر بھر کے لیے سو جانا ہے

    یہ سمندر ہیں بہت نا کافی

    ساری دنیا کو ڈبو جانا ہے

    کوئی قیمت نہیں ان اشکوں کی

    منتقل دھرتی میں ہو جانا ہے

    کوئی منزل نہیں ملتی مامونؔ

    کہیں رستے ہی میں سو جانا ہے

    مآخذ:

    • کتاب : Sanson Ke Paar (Pg. 205)
    • Author : Khalil Mamoon
    • مطبع : Educational Publishing House, Delhi (2015)
    • اشاعت : 2015

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY