جھوٹی خبریں گھڑنے والے جھوٹے شعر سنانے والے

حبیب جالب

جھوٹی خبریں گھڑنے والے جھوٹے شعر سنانے والے

حبیب جالب

MORE BYحبیب جالب

    جھوٹی خبریں گھڑنے والے جھوٹے شعر سنانے والے

    لوگو صبر کہ اپنے کئے کی جلد سزا ہیں پانے والے

    درد آنکھوں سے بہتا ہے اور چہرہ سب کچھ کہتا ہے

    یہ مت لکھو وہ مت لکھو آئے بڑے سمجھانے والے

    خود کاٹیں گے اپنی مشکل خود پائیں گے اپنی منزل

    راہزنوں سے بھی بد تر ہیں راہنما کہلانے والے

    ان سے پیار کیا ہے ہم نے ان کی راہ میں ہم بیٹھے ہیں

    نا ممکن ہے جن کا ملنا اور نہیں جو آنے والے

    ان پر بھی ہنستی تھی دنیا آوازیں کستی تھی دنیا

    جالبؔ اپنی ہی صورت تھے عشق میں جاں سے جانے والے

    مأخذ :
    • کتاب : Kulliyat-e-Habib Jalib (Pg. 278)
    • Author : Habib Jalib
    • مطبع : Tahir Sons Publishers (2012)
    • اشاعت : 2012

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے