جینا عذاب کیوں ہے یہ کیا ہو گیا مجھے

سلمان اختر

جینا عذاب کیوں ہے یہ کیا ہو گیا مجھے

سلمان اختر

MORE BYسلمان اختر

    جینا عذاب کیوں ہے یہ کیا ہو گیا مجھے

    کس شخص کی لگی ہے بھلا بد دعا مجھے

    میں اپنے آپ سے تو لڑا ہوں تمام عمر

    اے آسمان تو بھی کبھی آزما مجھے

    نکلے تھے دونوں بھیس بدل کے تو کیا عجب

    میں ڈھونڈتا خدا کو پھرا اور خدا مجھے

    پوچھیں گے مجھ کو گاؤں کے سب لوگ ایک دن

    میں اک پرانا پیڑ ہوں تو مت گرا مجھے

    اس گھر کے کونے کونے میں یادوں کے بھوت ہیں

    الماریاں نہ کھول بہت مت ڈرا مجھے

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    جینا عذاب کیوں ہے یہ کیا ہو گیا مجھے نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY