کعبہ ہے اگر شیخ کا مسجود خلائق

تاباں عبد الحی

کعبہ ہے اگر شیخ کا مسجود خلائق

تاباں عبد الحی

MORE BYتاباں عبد الحی

    کعبہ ہے اگر شیخ کا مسجود خلائق

    ہر بت ہے مرے دیر کا معبود خلائق

    نقصان سے اور نفع سے کچھ اپنے نہیں کام

    ہر آن ہے منظور مجھے سود خلائق

    میں دست دعا اس کی طرف کیونکہ اٹھاؤں

    ہوتا ہی نہیں چرخ سے مقصود خلائق

    پھرتا ہے فلک فکر میں گردش میں یہ سب کی

    ہرگز یہ نہیں چاہتا بہبود خلائق

    تاباںؔ مرے مذہب کو تو مت پوچھ کہ کیا ہے

    مقبول ہوں خلاق کا مردود خلائق

    مأخذ :
    • Deewan-e-Taban Rekhta Website)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY