کبھی خوابوں میں ملا وہ تو خیالوں میں کبھی

سلمان اختر

کبھی خوابوں میں ملا وہ تو خیالوں میں کبھی

سلمان اختر

MORE BYسلمان اختر

    کبھی خوابوں میں ملا وہ تو خیالوں میں کبھی

    راہ چلتے نہ ملا دن کے اجالوں میں کبھی

    زندگی ہم سے تو اس درجہ تغافل نہ برت

    ہم بھی شامل تھے ترے چاہنے والوں میں کبھی

    جن کا ہم آج تلک پا نہ سکے کوئی جواب

    خود کو ڈھونڈا کئے ان تلخ سوالوں میں کبھی

    تھوڑی رسوائی تمہاری بھی تو ہوگی یارو

    چھپ گئے شعر ہمارے جو رسالوں میں کبھی

    مأخذ :
    • کتاب : Junoon (Pg. 15)
    • Author : Naseem Muqri
    • مطبع : Naseem Muqri (1990)
    • اشاعت : 1990

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY