کہتا ہے کون ہجر مجھے صبح و شام ہو

بیاں احسن اللہ خان

کہتا ہے کون ہجر مجھے صبح و شام ہو

بیاں احسن اللہ خان

MORE BYبیاں احسن اللہ خان

    کہتا ہے کون ہجر مجھے صبح و شام ہو

    پر وصل میں بھی لطف نہیں جو مدام ہو

    شکوہ کیا ہو میرے لب زخم نے کبھو

    تو مجھ پہ آب تیغ الٰہی حرام ہو

    صاحب تم اپنے منہ کو چھپاتے ہو مجھ سے کیوں

    ہے اس سے کیا حجاب جو اپنا غلام ہو

    منہ لگنے سے رقیب کے اب سر چڑھے ہیں سب

    کر ڈالے اس کو ذبح ابھی انتظام ہو

    مت درد دل کو پوچھ بہ قول فغاںؔ بیاںؔ

    اک عمر چاہیے مرا قصہ تمام ہو

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY