کیسے کہہ دوں کی ملاقات نہیں ہوتی ہے

شکیل بدایونی

کیسے کہہ دوں کی ملاقات نہیں ہوتی ہے

شکیل بدایونی

MORE BY شکیل بدایونی

    کیسے کہہ دوں کی ملاقات نہیں ہوتی ہے

    روز ملتے ہیں مگر بات نہیں ہوتی ہے

    آپ للہ نہ دیکھا کریں آئینہ کبھی

    دل کا آ جانا بڑی بات نہیں ہوتی ہے

    چھپ کے روتا ہوں تری یاد میں دنیا بھر سے

    کب مری آنکھ سے برسات نہیں ہوتی ہے

    حال دل پوچھنے والے تری دنیا میں کبھی

    دن تو ہوتا ہے مگر رات نہیں ہوتی ہے

    جب بھی ملتے ہیں تو کہتے ہیں کہ کیسے ہو شکیلؔ

    اس سے آگے تو کوئی بات نہیں ہوتی ہے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    پنکج اداس

    پنکج اداس

    Tagged Under

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY