کیسے انہیں بھلاؤں محبت جنہوں نے کی

احمد مشتاق

کیسے انہیں بھلاؤں محبت جنہوں نے کی

احمد مشتاق

MORE BY احمد مشتاق

    کیسے انہیں بھلاؤں محبت جنہوں نے کی

    مجھ کو تو وہ بھی یاد ہیں نفرت جنہوں نے کی

    دنیا میں احترام کے قابل وہ لوگ ہیں

    اے ذلت وفا تری عزت جنہوں نے کی

    تزئین کائنات کا باعث وہی بنے

    دنیا سے اختلاف کی جرأت جنہوں نے کی

    آسودگان منزل لیلیٰ اداس ہیں

    اچھے رہے نہ طے یہ مسافت جنہوں نے کی

    اہل ہوس تو خیر ہوس میں ہوئے ذلیل

    وہ بھی ہوئے خراب محبت جنہوں نے کی

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    کیسے انہیں بھلاؤں محبت جنہوں نے کی نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed from your favorites