کریں گے قصد ہم جس دم تمہارے گھر میں آویں گے

بہادر شاہ ظفر

کریں گے قصد ہم جس دم تمہارے گھر میں آویں گے

بہادر شاہ ظفر

MORE BYبہادر شاہ ظفر

    کریں گے قصد ہم جس دم تمہارے گھر میں آویں گے

    جو ہوگی عمر بھر کی راہ تو دم بھر میں آویں گے

    اگر ہاتھوں سے اس شیریں ادا کے ذبح ہوں گے ہم

    تو شربت کے سے گھونٹ آب دم خنجر میں آویں گے

    یہی گر جوش گریہ ہے تو بہہ کر ساتھ اشکوں کے

    ہزاروں پارۂ دل میرے چشم تر میں آویں گے

    گر اس قید بلا سے اب کی چھوٹیں گے تو پھر ہرگز

    نہ ہم دام فریب شوخ غارت گر میں آویں گے

    نہ جاتے گرچہ مر جاتے جو ہم معلوم کر جاتے

    کہ اتنا تنگ جا کر کوچہ دلبر میں آویں گے

    گریباں چاک لاکھوں ہاتھ سے اس مہر طلعت کے

    برنگ صبح محشر عرصۂ محشر میں آویں گے

    جو سرگردانی اپنی تیرے دیوانے دکھائیں گے

    تو پھر کیا کیا بگولے دشت کے چکر میں آویں گے

    ظفرؔ اپنا کرشمہ گر دکھایا چشم ساقی نے

    تماشے جام جم کے سب نظر ساغر میں آویں گے

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    کریں گے قصد ہم جس دم تمہارے گھر میں آویں گے نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY