خود کو ہر آرزو کے اس پار کر لیا ہے

امیر امام

خود کو ہر آرزو کے اس پار کر لیا ہے

امیر امام

MORE BYامیر امام

    خود کو ہر آرزو کے اس پار کر لیا ہے

    ہم نے اب اس کا سایہ دیوار کر لیا ہے

    جاتی تھی میرے دل سے جو تیرے آستاں تک

    دنیا نے اس گلی میں بازار کر لیا ہے

    دے داد آ کے باہر شہ رگ سے خوں ہمارا

    اس نے جو اپنا چہرہ گلنار کر لیا ہے

    بس چشم خوں فشاں کو ملتے نہیں ہیں آنسو

    ورنہ ترا مرکب تیار کر لیا ہے

    ہے وجہ کج کلاہی طوق گلو ہمارا

    زنجیر پا کو اپنی تلوار کر لیا ہے

    محسوس کر رہا ہوں خاروں میں قید خوشبو

    آنکھوں کو تیری جانب اک بار کر لیا ہے

    اس بار وہ بھی ہم سے انکار کر نہ پایا

    ہم نے بھی اب کی اس سے اقرار کر لیا ہے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    امیر امام

    امیر امام

    RECITATIONS

    امیر امام

    امیر امام

    امیر امام

    خود کو ہر آرزو کے اس پار کر لیا ہے امیر امام

    مأخذ :
    • کتاب : NAQSH-E-PA HAWAON KE (Pg. 39)
    • اشاعت : 2013

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY