کس طرف ہائے مرے دل مرا لشکر چھوٹا

سید علی ظہیر

کس طرف ہائے مرے دل مرا لشکر چھوٹا

سید علی ظہیر

MORE BY سید علی ظہیر

    کس طرف ہائے مرے دل مرا لشکر چھوٹا

    مرا کنبہ مرا خیمہ مرا گھر بھر چھوٹا

    میں کھڑا گھورتا رہتا ہوں خلا میں کیا کیا

    کوئی بتلائے مجھے کیسے وہ منظر چھوٹا

    لکھ لیا کرتا تھا جو دل پہ گزرتی تھی مگر

    ایسی کچھ گزری قلم ہاتھ سے لگ کر چھوٹا

    بات کرتے ہیں محبت کی جہاں بستے ہیں لوگ

    میں کہاں رہتا ہوں کس دیس مرا گھر چھوٹا

    سانحہ ایک نہیں سینکڑوں دفتر میں ظہیرؔ

    ذکر اس کا ہے جہاں دل سا مسافر چھوٹا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY