کوئی ہم دم نہ رہا کوئی سہارا نہ رہا

مجروح سلطانپوری

کوئی ہم دم نہ رہا کوئی سہارا نہ رہا

مجروح سلطانپوری

MORE BYمجروح سلطانپوری

    کوئی ہم دم نہ رہا کوئی سہارا نہ رہا

    ہم کسی کے نہ رہے کوئی ہمارا نہ رہا

    شام تنہائی کی ہے آئے گی منزل کیسے

    جو مجھے راہ دکھا دے وہی تارا نہ رہا

    اے نظارو نہ ہنسو مل نہ سکوں گا تم سے

    تم مرے ہو نہ سکے میں بھی تمہارا نہ رہا

    کیا بتاؤں میں کہاں یوں ہی چلا جاتا ہوں

    جو مجھے پھر سے بلا لے وہ اشارہ نہ رہا

    مآخذ:

    • کتاب : Kulliyat-e-Majrooh Sultanpuri (Pg. 198)
    • Author : Majrooh sultanpri
    • مطبع : Alhamd Publications

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY