کوئی منظر ہو آنکھوں کو بہت اچھا دکھاتا ہے

اشفاق عامر

کوئی منظر ہو آنکھوں کو بہت اچھا دکھاتا ہے

اشفاق عامر

MORE BYاشفاق عامر

    کوئی منظر ہو آنکھوں کو بہت اچھا دکھاتا ہے

    محبت میں یہ دل صحرا چمن جیسا دکھاتا ہے

    بدلتا کچھ نہیں ہے عشق میں موسم گزرتے ہیں

    ہمیں تو آئنہ اب تک وہی چہرہ دکھاتا ہے

    کبھی باغ تمنا میں اک ایسا پھول کھلتا ہے

    پرانے پیڑ پودوں کو جو پھر تازہ دکھاتا ہے

    بھٹکنے کے لئے ہم خواب سے باہر نکلتے ہیں

    کوئی آکر ہمیں پھر خواب کا رستہ دکھاتا ہے

    تم ایسی موج میں ہو جو پلٹ کر آ نہیں سکتی

    ہمیں گرداب اپنے پھیر میں کیا کیا دکھاتا ہے

    مأخذ :
    • کتاب : رنگ سا اڑتا ہے (Pg. 29)
    • Author : اشفاق عامر
    • مطبع : عکاس پبلی کیشنز،اسلام آباد

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY