کوئی تو پھول کھلائے دعا کے لہجے میں

افتخار عارف

کوئی تو پھول کھلائے دعا کے لہجے میں

افتخار عارف

MORE BYافتخار عارف

    کوئی تو پھول کھلائے دعا کے لہجے میں

    عجب طرح کی گھٹن ہے ہوا کے لہجے میں

    یہ وقت کس کی رعونت پہ خاک ڈال گیا

    یہ کون بول رہا تھا خدا کے لہجے میں

    نہ جانے خلق خدا کون سے عذاب میں ہے

    ہوائیں چیخ پڑیں التجا کے لہجے میں

    کھلا فریب محبت دکھائی دیتا ہے

    عجب کمال ہے اس بے وفا کے لہجے میں

    یہی ہے مصلحت جبر احتیاط تو پھر

    ہم اپنا حال کہیں گے چھپا کے لہجے میں

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    افتخار عارف

    افتخار عارف

    RECITATIONS

    افتخار عارف

    افتخار عارف

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    افتخار عارف

    کوئی تو پھول کھلائے دعا کے لہجے میں افتخار عارف

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY